امامیہ نیوزاہم خبریںفرنٹ پیج

بحرینی فرمانروا، انسانی حقوق کے سب سے بڑے مخالف:ادارہ انسانی حقوق 

بحرینی فرمانروا، انسانی حقوق کے سب سے بڑے مخالف:ادارہ انسانی حقوق

منامہ (مانیٹرنگ ڈیسک) انسانی حقوق کے ادارے  کے سربراہ باقر درویش نے کہا ہے کہ: بحرین میں ہونے والے مظالم اور انسانی حقوق کی خلاف ورزی کے پیچھے بحرین کے بادشاہ کا ہاتھ ہے۔

“بحرین فورم فور ہیومن رائٹس”، “انجمن سلام برائے ڈیموکریسی اور انسانی حقوق” اور “خلیج فاؤنڈیشن برائے ڈیموکریسی اور انسانی حقوق” نے ایک رپورٹ جس کا عنوان ہے “موت یا اعتراف” شائع کیا ہے، بحرین میں چلنے والے مقدمات میں عام شہریوں کو حقوق نہیں دیے گئے ہیں۔

باقر درویش نے کہا ہے کہ: بحرینی قیدیوں کو اتنا ٹارچر کیا جاتا ہے، کہ وہ بے بنیاد اعتراف پر مجبور ہو جاتے ہیں۔بحرین کے عدالتی نظام پر کسی عالمی ادارے کی نظارت نہیں ہے جس کی وجہ سے انسانی حقوق کا خیال نہیں رکھا جا رہا ہے۔

عنقریب عدالت میں آرمی چیف ایک کیس کی سماعت کریں گے کہ کچھ جوانوں نے ان کو قتل کرنے کا منصوبہ بنایا تھا، اور اہم بات یہ ہے کہ اس کیس کے لیے جج بھی آرمی چیف ہی منتخب کرینگے۔

سید علوی الموسوی پر بھی یہ الزام عائد کیا گیا تھا اور ایک سال پہلے انہیں گرفتار کر کے نامعلوم مقام پر منتقل کر دیا گیا، اور تا حال ان کے اہلخانہ کو ان کے بارے کوئی معلومات فراہم نہیں کی گئی۔

بحرین میں ہونے والے مظالم اور انسانی حقوق کی خلاف ورزی کے پیچھے بحرین کے بادشاہ اور کمانڈرز کا ہاتھ ہے، اور ان کے خلاف مظالم کرنے پر عالمی عدالت میں مقدمہ چلانا چاہئے۔باقر درویش نے کہا: ہم عالمی اداروں سے مطالبہ کرتے ہیں، بحرین میں انسانی حقوق کو پائمال ہونے سے بچائیں۔

Tags

Khuahar Fatima

Imamia Students Organization Pakistan (Girls Wing), Join us for all the updates. Email: isogirlswing@gmail.com

Related Articles

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Close